RSS Feed

25 March, 2014 18:31

Posted on

NADEEM MALIK LIVE

samaa.tv/nadeemmaliklive/

25-MARCH-2014

طالبان سے دو یا تین ملاقاتوں میں معاملات کا فیصلہ ہو جانا چاہئیے۔ عبدالقادر بلوچ کی ندیم ملک لائیو میں گفتگو

طالبان سے ملاقات میں ان کے جرائم کی بات نہیں کی جائے گی بلکہ ان سے ایک گروپ کے طور پر بات کی جائے گی۔ عبدالقادر بلوچ

طالبان سے معاملات طے کرنے میں اس بات کو یقینی بنایا جائے گا کہ وہ پھر ہتھیار نہیں اٹھایں گے۔ عبدالقادر بلوچ

میرے خیال میں طالبان سے مزاکرات کے مسئلے پر کابینہ بھی ایک پیج پر نہیں ہے۔ سعید غنی

میرے خیال میں حکومت کی طرف سے کوشش کی جائے گی کہ مزاکرات کو طول دیا جائے۔ سعید غنی

طالبان نے ساٹھ ہزار لوگوں کو ایسے ہی نہیں مارا ان کے کچھ مطالبات بھی ہوں گے۔ سعید غنی

مزاکرات کی درخواست طالبان کی طرف سے نہیں آئی تھی یہ حکومت کی طرف سے آئی تھی۔ سعید غنی

عالم اسلام میں فرقہ وارانہ فسادات کا رحجان بہت اہم بات ہے۔ عارف علوی

اسلامی نظام کے نفاز کے مطالبے کو ایک چھتری کو طور پر استعمال کیا جا رہا ہے۔ عارف علوی

طالبان کے پاس اب پاکستان کے خلاف نیٹو کا حمایتی ہونے کا الزم لگانے کا موقع ختم ہو چکا ہے۔ عبدالقادر بلوچ

پاکستان کے اندر طالبان کی حمایت کم ہو رہی ہے قبائلی علاقعوں کے لوگ بھی ان کے خلاف ہیں۔ عبداالقادر بلوچ

پاکستان میں فرقہ وارانہ فساد بڑھ سکتا ہے اور اس میں ہمارے اسلامی دوست ممالک بھی ملوث ہیں۔ عارف علوی

فرقہ وارانہ فسادات کا خطرہ طالبان کے خطرے سے بھی بہت بڑا ہے۔ عارف علوی

طالبان سے مزاکرات کی وجہ سے بہت سی مثبت چیزیں سامنے آئی ہیں۔ عارف علوی

طالبان کہتے تھے کہ فوج کے پاس عورتیں اور بچے قید ہیں فوج کی تردید کے بعد اب وہ یہ بہانہ استعمال نہیں کر سکتے۔ عارف علوی

حکومت طالبان سے مزاکرات میں ہتھیار نہ ڈالے بلکہ سٹیٹ کی رٹ کو قائم رکھے۔ سعید غنی

کسی کو یہ غلط فہمی نہیں ہونی چاہئیے کہ حکومت طالبان کے ساتھ کمزوری سے بات چیت کر رہی ہے۔ عبدالقادر بلوچ

طالبان نے قبائلیوں پر بہت مظالم کئیے ہیں وہ وہاں کبھی بھی آزادانہ نہیں گھوم سکیں گے۔ عبدالقادر بلوچ

طالبان سے امن کے بعد جہاں ان کا دوبارہ خطرہ ہو سکتا ہے ان علاقعوں میں فوجی چھاؤنیاں ہونی چاہئیں۔ عبدالقادر بلوچ

امریکہ اور افغانستان کو شامل کئیے بغیر طالبان کے ساتھ امن نہیں ہو سکتا۔ سعید غنی

بہت سے طالبان دہشت گردی کر کے افغانستان میں جا کر چھپ جاتے ہیں اس لئیے امریکہ اور افغانستان کا تعاون ضروری ہے۔ سعید غنی

پاکستان کو اب اپنی پالیسیاں علاقعے میں بڑی طاقتوں کی موجودگی کی بنیاد پر نہیں بلکہ اپنے ہمسایوں کو سامنے رکھتے ہوئے بنانی چاہئییں۔ عارف علوی

طالبان کے ساتھ دو تین ملاقاتوں میں سمت طے ہو جائے گی کہ آگے کس طرف بڑھنا ہے۔ عبدالقادر بلوچ

طالبان کے ساتھ مزاکرات کی کمیٹی میں حکومت کی طرف سے کوئی وزیر یا کوئی دوسرا آدمی شامل کیا جا سکتا ہے۔ عبدالقادر بلوچ

نیوکلئیر مسئلے پر پاکستان ایک زمہ دار ملک ہے اپنی باتیں منوانے کے لئیے ہمیں ڈرایا جاتا ہے۔ عارف علوی

پاکستان میں امن کے لئیے دہشت گردی کو ختم کرنا ہو گا اور لوگوں کے زہنوں سے انتہا پسندی کو ختم کرنا ہو گا۔ سعید غنی

ہر وہ گروپ جو کسی طرح بھی انتہا پسندی یا دہشت گردی میں ملوث ہے اس کے خلاف کاروائی ہو گی۔ عبدالقادر بلوچ

میرے خیال میں دو سال کی مدت میں ملک میں امن ہو جائے گا۔ عبدالقادر بلوچ

ہم نے دہشت گردی پر قابو پا لیا تو پاکستان کی ترقی کو کوئی نہیں روک سکے گا۔ عارف علوی

About NadeemMalikLive

NADEEM MALIK LIVE IS A FLAGSHIP CURRENT AFFAIRS PROGRAMME OF SAMAA.TV

Comments are closed.

%d bloggers like this: