RSS Feed

8 September, 2014 16:17

Posted on

NADEEM MALIK LIVE

samaa.tv/nadeemmaliklive/

08-SEP-2014

میرے الیکشن میں کتنے ووٹ مسترد ہوئے مجھے معلوم نہیں یہ باتیں الیکشن کمشن سے پوچھیں۔ میر ظفراللہ جمالی کی ندیم ملک لائیو میں گفتگو

میں اپنے حلقے سے ہمیشہ الیکشن لڑتا ہوں اور جیتتا ہوں۔ ظفراللہ جمالی

میر ظفراللہ جمالی کے حلقے سے پچیس ہزار ووٹ مسترد کئیے گئے۔ سرور باری

ترانوے پولینگ اسکیم تبدیل کی گئیں اور سولہ سو غیر قانونی تقرریاں کی گئیں۔ سرور باری

ہم نے بے ضابطگیوں کے بارے میں الیکشن کمشن سے پوچھا تو وہ ٹس سے مس نہیں ہوا۔ سرور باری

عبوری حکومت بنانے کے بارے میں سوال پیپلز پارٹی اور مسلم لیگ ن سے پوچھا جانا چاہئیے۔ ظفراللہ جمالی

ہمارا پنجاب حکومت کے ساتھ کسی قسم کا کوئی پراجیکٹ نہیں ہے۔ احمد بلال محبوب

ہماری تنظیم کی ڈنمارک سے فنڈنگ ہوتی ہے۔ احمد بلال محبوب

لوگ اپنی پسند کی جماعت کی تو بہت تعریف کرتے ہیں لیکن باقی سیاسی جماعتوں پر یقین نہیں رکھتے۔ احمد بلال محبوب

لوگ سب سے زیادہ فوج کو پسند کرتے ہیں لیکن صرف انیس فیصد اس کے حکومت کرنے کے حق میں ہیں۔ احمد بلال محبوب

ہمارے سروے کے مطابق چیف منسٹر پنجاب کی کارکردگی وزیراعظم سے بہتر ہے۔ احمد بلال محبوب

سب کہتے ہیں کہ دھاندلی ہوئی ہے تو دھاندلی کروانے والے خود کیسے تحقیقات کروایں گے۔ ظفراللہ جمالی

چارٹر آف ڈیموکریسی در حقیقت پیپلز پارٹی اور مسلم لیگ ن کے درمیان باری باری حکومت بنانے کا معاہدہ تھا۔ ظفراللہ جمالی

جب میں چیف منسٹر بلوچستان تھا تو طاہرالقادری نواز شریف کو میرے پاس ایک سفارش کے لئیے لائے تھے۔ طفراللہ جمالی

طاہرالقادری نے کیا سفارش کروائی تھی اس بات پر پردہ پڑا رہے تو اچھا ہے۔ ظفراللہ جمالی

عمران خان نے مجھے کہا تھا کہ مشرف نے میری بجائے آپ کو وزیراعظم منتخب کر لیا ہے میں آپ کو ووٹ نہیں دوں گا۔ ظفراللہ جمالی

چارٹر آف ڈیموکریسی یہ تھا کہ پیپلز پارٹی اور مسلم لیگ ن جو ایک دوسرے کی مخالفت کرتے ہیں اس سے باہر نکلیں۔ امین فہیم

میں گواہی دیتا ہوں کہ چارٹر آف ڈیموکریسی ملک میں جمہوریت کے لئیے تھا۔ امین فہیم

اس وقت ملک میں ایسی صورت حال ہے کہ ہر کسی کو اپنی انا چھوڑ دینی چاہئیے۔ امین فہیم

دھاندلی کی تحقیقات کے لئیے جیوڈیشل کمشن کی عوام بھر پور طریقے سے سپورٹ کرتے ہیں۔ احمد بلال محبوب

میں میر ظفراللہ جمالی کے لگائے گئے الزام کی وضاحت پیش کرنا چاہتا ہوں ۔ طاہرالقادری

خان آف قلات کے بیٹے اغوا ہو گئے تھے میں نے ان کی رہائی کے لئیے ضیا۶الحق پر دباؤ ڈالنے کے لئیے ایک تحریک چلائی تھی۔ طاہرالقادری

ضیا۶الحق نے نواز شریف سے کہا کہ بات بڑھ رہی ہے آپ طاہرالقادری کووزیراعلی بلوچستان جمالی کے پاس لے جا کر مسئلہ حل کروا دیں۔ طاہرالقادری

میں میر ظفراللہ جمالی صاحب سے گزارش کروں گا کہ وہ تصدیق فرما دیں کہ میں نے کسی زاتی کام کے لئیے سفارش نہیں کروائی تھی۔ طاہرالقادری

میں طاہرالقادری صاحب کی بات کی تصدیق کرتا ہوں انہوں نے جو کہا درست ہے۔ ظفراللہ جمالی

اگر چوبیس دنوں میں یہ طے نہیں ہو سکا کہ کیا کرنا ہے تو پھر ملک کیسے چلے گا۔ ظفراللہ جمالی

وقت کی بڑی اہمیت ہے گزر گیا تو واپس نہیں آئے گا اس کا درست استعمال کریں اور مسئلے کا حل نکالیں۔ امین فہیم

About NadeemMalikLive

NADEEM MALIK LIVE IS A FLAGSHIP CURRENT AFFAIRS PROGRAMME OF SAMAA.TV

Comments are closed.

%d bloggers like this: