RSS Feed

17 August, 2015 17:40

Posted on

NADEEM MALIK LIVE

samaa.tv/nadeemmaliklive/

17-AUGUST-2015

دہشت گردوں کے خلاف آخری جنگ سدرن پنجاب میں ہونی ہے وہاں ان کے اڈے ہیں۔ اطہر عباس کی ندیم ملک لائیو میں گفتگو

پنجاب حکومت اب تک دہشت گردی کے خلاف سٹیٹ آف ڈینائل میں تھی۔ اطہر عباس

ایپیکس کمیٹی کی میٹنگ کے بعد پنجاب میں پولیس اور انٹیلی جنس ایجنسیوں کے ہراول دستے کے طور پر کرنل شجاع کام کر رہے تھے۔ اطہر عباس

افسوس ہے کہ کرنل شجاع جیسے لیڈر جو دہشت گردی کے خلاف کلیدی کردار ادا کر رہے تھے کی ہم حفاظت نہیں کر سکے۔ اطہر عباس

اب دہشت گردوں نے فیصلہ کر لیا ہے کہ آئی آر اے کی طرح سیاسی اور دوسری اہم شخصیات کو نشانہ بنایں گے۔ اطہر عباس

شہباز شریف نے آج پھر دہشت گردی کے خلاف اپنے عزم کا اعادہ کیا ہے۔ عابد شیر علی

میڈیا کو وزیروں کی سکیورٹی پر زیادہ تنقید نہیں کرنی چاہئیے شاید اسی لئیے کرنل شجاع نے زیادہ سکیورٹی نہیں لی اور دہشت گردی کا نشانہ بن گئے۔ سعید غنی

شجاع خانزادہ پنجاب حکومت کے پہلے شخص تھے کہ جنہوں نے دہشت گردی کے خلاف لیڈ لی۔ سعید غنی

کرنل شجاع اگر سکیورٹی سے انکار کر رہے تھے تو سکیورٹی والوں کا کام تھا کہ ان کی حفاظت یقینی بناتے۔ اطہر عباس

کرنل شجاع ایک اکیلی شخصیت نہیں تھے وہ دہشت گردی کے خلاف ایک ادارے کے سربراہ تھے۔ اطہر عباس

ہمیں دہشت گردوں کی زہنی سوچ میں گھسنے کی ضرورت ہے اور اس کو جانچ کر اس سے کئی قدم آگے رہنا ہے۔ اطہر عباس

ہمیں دہشت گردوں کی کاروائیوں پر رد عمل کی بجائے ان کی حکمت عملی کو سمجھ کر وار کرنا چاہئیے۔ اطہر عباس

فیصل آباد کا پولیس آفیسر فرخ عباس انیس لوگوں کی ٹارگٹ کلنگ اور بھتہ خوری میں ملوث ہے۔ عابد شیر علی

شہباز شریف نے فیصل آباد کا دورہ کیا تو تمام لوگوں نے مطالبہ کیا کہ فرخ عباس کے متعلق تحقیقات کی جایں اور اس کو پکڑ کر لایں۔ عابد شیر علی

رانا ثنا اللہ پر الزامات ہم نے یا پی ٹی آئی نے نہیں لگائے بلکہ چوہدری شیر علی نے لگائے ہیں جو مسلم لیگ ن کے ایک زمہ دار شخص ہیں۔ سعید غنی

رانا ثنا اللہ کو میرے والد نے سیاست میں انگلی پکڑ کر چلنا سکھایا۔ عابد شیر علی

چوہدری شیر علی اور رانا ثنا اللہ کا جھگڑا مسلم لیگ ن کا اندرونی معاملہ ہے وزیراعظم اور وزیراعلی کو اس میں مداخلت کر کے حل کر لینا چاہئیے۔ اطہر عباس

دہشت گردی کے خلاف جنگ میں اداروں کو حکومت کی طرف سے مکمل تعاون اور حمایت چاہئیے۔اطہر عباس

پی ٹی آئی کے دھرنے کے پیچھے جرنیلوں کےکرادر پر بحث کسی کے مفاد میں نہیں ہے اس وقت ملک کے حالات ٹھیک نہیں ہیں۔ اطہر عباس

دھرنے کے پیچھے جرنیلوں کے کردار پر مشاہد اللہ کے علاوہ خواجہ آصف اور محمد زبیر بھی اپنے بانات دے چکے ہیں۔ سعید غنی

میرے خیال میں دھرنے کے پیچھے جرنیلوں کے کردار کی تحقیقات ہو جانی چاہئییں تا کہ یہ بحث ختم ہو۔ سعید غنی

جب وزیراعظم نے کہہ دیا ہے کہ جنرل ظہیر کی آڈیو ٹیپ کی کوئی بات نہیں ہے تو پھر یہ بات اب ختم ہو جانی چاہئیے۔ عابد شیر علی

اگر جرنیلوں کے خلاف کوئی ثبوت ہے تو سیاسی قیادت کو عسکری قیادت سے پس پردہ بات کرنی چاہئیے۔ اطہر عباس

حساس معاملات کے متعلق لوگوں میں بات کرنے سے مسائل پیدا ہو جاتے ہیں۔ اطہر عباس

مسلم لیگ ن کو چوہدری شیر علی کے رانا ثنا اللہ پر لگائے گئیے الزامات کو کلئیر کرنا چاہئیے الزامات کی نوعیت بہت سنگین ہے۔سعید غنی

دہشت گردی کے خلاف جنگ میں حکومت کی طرف سے کوئی سنجیدگی نہیں دکھائی جا رہی۔ اطہر عباس

حکومت کو جنرل راحیل کی مقبولیت سے خوف زدہ نہیں ہونا چاہئیے دونوں کے الگ الگ کام ہیں۔ اطہر عباس

وزیراعظم اور وزیراعلی اپنا مصمم ارداہ ظاہر کر چکے ہیں کہ آخری دہشت گرد کے خاتمے تک جنگ جاری رہے گی۔ عابد شیر علی

حکومت اور فوجی قیادت کے پاس سوائے ایک پیج پر ہونے کے اب کوئی اور آپشن موجود نہیں ہے۔ سعید غنی

About NadeemMalikLive

NADEEM MALIK LIVE IS A FLAGSHIP CURRENT AFFAIRS PROGRAMME OF SAMAA.TV

Comments are closed.

%d bloggers like this: