RSS Feed

24 December, 2015 06:17

Posted on

NADEEM MALIK LIVE

http://videos.samaa.tv/NadeemMalik/

23-DECEMBER-2015

صدیق بلوچ دو ہزار تیرہ کے الیکشن میں مسلم لیگ ن کے امیدوار نہیں تھے بلکہ آزاد حیثیت سے جیتے تھے۔ شیخ روحیل اصغر کی ندیم ملک لائیو میں گفتگو

جہانگیر ترین نے دو ہزار تیرہ کے الیکشن میں جو الزامات لگائے تھے وہ ایک آزاد امیدوار پر تھے مسلم لیگ ن پر نہیں تھے۔ روحیل اصغر

مجھے سمجھ میں نہیں آتا کہ ہم الیکشن کو زندگی موت کا مسئلہ کیوں بنا لیتے ہیں آج بھی یہی کچھ ہو رہا ہے۔ روحیل اصغر

این اے ایک سو بائیس کی طرح لودھراں کے الیکشن کو بھی اس طرح بنا دیا گیا ہے کہ جیسے پورے پاکستان کا الیکشن ہو۔ سلمان بلوچ

ہارنے والے کو جیتنے والے کے ڈیرے پر جا کر اسے مبارکباد دینی چاہئیے۔ سلمان بلوچ

نتیجے کا ٹرینڈ بہت اچھا ہے دہی علاقعوں سے بھی اللہ کے فضل سے اچھے نتائج کی خبریں آ رہی ہیں۔ جہانگیر ترین

ابھی مجھے جیت کی مبارکباد نہ دیں رات دس بجے تک مکمل نتیجہ آ جائے گا امید ہے کہ انشا اللہ میں جیت جاؤں گا۔۔ جہانگیر ترین

فوج کے آنے سے بہت فرق پڑا ہے نہ آتی تو بہت خون خراب ہونے کا خدشہ تھا۔ جہانگیر ترین

میں جیت گیا تو ثابت ہو جائے گا کہ پچھلے الیکشن میں دھاندلی ہوئی تھی۔ جہانگیر ترین

آج الیکشن کے دن کوئی دھاندلی نہیں ہوئی لیکن پر پول رگنگ بہت زیادہ ہوئی ہے۔ جہانگیر ترین

الیکشن کمشن ناکام ہو چکا ہے انہیں کسی مسئلے پر درخواست دیں تو تاریخ دے دیتے ہیں ایکشن نہیں لیتے۔ جہانگیر ترین

جہانگیر ترین ٹھیک کہتے ہیں الیکشن کمشن کسی خلاف ورزی پر نوٹس تو دے دیتا ہے لیکن بعد میں معافی مانگ لیتا ہے۔ سلمان بلوچ

پی ٹی آئی والے الیکشن اصلاحات کی کمیٹی میں تو آتے نہیں ہیں لیکن ٹی وی پر بیٹھ کر تنقید کرتے ہیں۔ روحیل اصغر

الیکشن کو اپنی انا کا مسئلہ نہیں بنانا چاہئیے کسی نے جیتنا اور کسی نے ہارنا ہوتا ہے اس جنگ نہیں بنانا چاہئیے۔ روحیل اصغر

روحیل اصغر کہہ رہے ہیں کہ الیکشن کو الیکشن سمجھ کر لڑیں فرق تو ہم جیسے لوگوں کر پڑتا ہے کہ جن پر دھاندلی مسلط کر دی جاتی ہے۔ جہانگیر ترین

میرے مقابلے پر ایک شخص کو جس کا نام جہانگیر بھی نہیں ہے لیکن جہانگیر خان کے نام پر الیکشن کمشن نے بلے باز کا نشان الاٹ کردیا ہے۔ جہانگیر ترین

میں نے الیکشن کشمن کو جہانگیر خان کے نشان بلے باز کے خلا ف درخواست دی تو الیکشن کمشن نے کہا اب بہت دیر ہو چکی ہے ہم بیلٹ پیپر چھپوا چکے ہیں۔ جہانگیر ترین

میں نے الیکشن کمشن کو کہا کہ نئے بیلٹ پیپر چھپوا لیں خرچا میں دے دوں گا لیکن وہ نہیں مانے۔ جہانگیر ترین

میں نے فیصلہ کیا ہے کہ آئندہ کسی مسئلے پر الیکشن کمشن نہیں جاؤں گا ان سے کوئی امید نہیں ہے۔ جہانگیر ترین

یہ حکمران کب تک ہم پر مسلط رہیں گے ہمارا قصور کیا ہے ہم نے کیا کیا ہے۔ صارم برنی

ہم صبح بچی کی موت پر ہائی کورٹ جا رہے ہیں ہم نہیں کہتے کہ بلاول قصوروار ہے یہ فیصلہ عدالت کرے گی کہ کس کا قصور ہے۔ صارم برنی

ایک شخص کے پروٹوکول کے لئیے ایک بچی کی جان چلی گئی ایسا نہیں ہونا چاہئیے۔ سلمان بلوچ

ہمیں اپنے سسٹم کو ٹھیک کرنے کی ضرورت ہے برطانیہ کے وزیراعظم ہسپتال گئے ڈاکٹر نے انہیں وہاں سے چلے جانے کو کہا تو وہ چلے گئے۔ سلمان بلوچ

حکومت رینجرز کا اختیارات نہیں دے رہی آج کراچی میں جو امن ہے یہ پہلے نہیں دیکھا۔ صارم برنی

کراچی شہر میں امن ہے تو پھر پرٹوکول کی کیا ضرورت ہے اور امن نہیں ہے تو پھر رینجرز کو اختیارات کیوں نہیں دیتے۔ صارم برنی

ہمیں پروٹوکول کی عادت پڑ چکی ہے بلاول کے لئیے ہسپتال کی ساری سڑکیں بند کر دی گئی تھیں۔عمران اسماعیل

آج بچی کے مرنے کی خبر رپورٹ ہو گئی نہ جانے کتنے ایسے لوگ ہوں گے کہ جن کو رپورٹ نہیں کیا جا سکا۔ عمران اسماعیل

تھر میں ہزاروں بچے مر گئے لیکن پرٹوکول میں کئی قسم کے کھانے پیش کئیے گئے تھے۔ سلمان بلوچ

ایم کیو ایم پروٹوکول کے خلاف ریزولیوشن لے کر آ رہی ہے اور ایک حقیقی اپوزیشن جماعت کا کردار ادا کرے گی۔ سلمان بلوچ

پیپلز پارٹی نے شرمندگی کا اظہار بھی نہیں کیا سندھ کے وزیر صحت نے کہا ہے کہ ایک بچی کے مرنے سے کوئی فرق نہیں پڑتا۔ عمران اسماعیل

ہم بھی انسان ہیں کیڑے مکوڑے نہیں ہیں ہم میں بھی بلاول اور زرداری کی طرح کی ہی جان ہے۔ صارم برنی

About NadeemMalikLive

NADEEM MALIK LIVE IS A FLAGSHIP CURRENT AFFAIRS PROGRAMME OF SAMAA.TV

Comments are closed.

%d bloggers like this: