RSS Feed

7 June, 2017 08:59

Posted on

NADEEM MALIK LIVE

www.samaa.tv/videos/NadeemMalik

06-june-2017

پاناما کا کیس بدقسمتی سے قانونی کم ہے اور سیاسی زیادہ ہے۔ بیرسٹر ظفراللہ کی ندیم ملک لائیو میں گفتگو

پاناما کیس عدالت کے سامنے ہے وہ جو بھی فیصلہ کر دے۔

سینٹ کے استعفی کے دو نقطہ نظر ہیں ایک یہ ہے کہ استعفی واپس لیا جا سکتا ہے اور دوسرا یہ کہ نہیں۔

قانون کے اندر استعفی واپس لینے کی کوئی گنجائش نہیں ہے۔

ہم نے جے آئی ٹی کو نیب والی پوری پاورز دے دی ہیں۔

پی ٹی آئی کے عارف علوی نے کہا کہ

پاناما کیس میں تحقیقات ہونے سے حکومت پر بہت زیادہ دباؤ ہے۔

قطری شہزادے کے عدالت کے سامنے پیش ہونے سے انکار پر حکومت اور بھی زیادہ زیر پریشر ہو گئی ہے۔

حسین نواز کی تصویر جاری کر کے مظلوم بننے کی کوشش کی جا رہی ہے کہ فیصلہ خلاف آئے تو کہہ سکیں کہ ہم نے تو پہلے ہی بتا دیا تھا۔

حسین نواز کی تصویر جاری کرنا حکومت کی اپنی ایک سازش ہے تا کہ جے آئی ٹٰی کو متنازع بنایا جا سکے۔

حکومت اب تک عدالت کے سامنے منی ٹریل پیش نہیں کر سکی ہے۔

پیپلز پارٹی کے نئیر بخاری نے کہا کہ

جے آئی ٹی میں نواز شریف اور ان کے بیٹوں کو موقع دیا گیا ہے کہ وہ اپنی صفائی پیش کر سکیں۔

حکومت کی طرف سے جے آئی ٹی کے متعلق ایک استحصال والا رویہ دکھائی دے رہا ہے۔

سب ڈرامہ ہے نہال ہاشمی کی کیا مجال ہے کہ پارٹی لیڈرشپ کہے کہ استعفی دو اور وہ نہ دیں۔

جے آئی ٹی کبھی نہیں چاہتی کہ اس کی تفتیش کی تفصیل لیک ہو کیونکہ اس طرح اس پر پریشر آ جاتا ہے۔

جے آئی ٹی کی سکیورٹی حکومت کے پاس ہے پھر حسین نواز کی تصویر باہر کیسے آئی۔

قانون کے مطابق ایک دفعہ استعفی دے دیا تو دے دیا نہال ہاشمی اب اپنا استعفی واپس نہیں لے سکتے۔

پاناما کیس کی دستاویزات کی تصدیق کرانے کہ زمہ داری نواز شریف اور ان کے بیٹوں پر ہے۔

سابق اٹارنی جنرل عرفان قادر نے کہا کہ

بادی النظر میں ایسا لگتا ہے کہ سپریم کورٹ کی رجسٹری نے جے آئی ٹی ممبران منتخب کرنے کے لئیے کال کی۔

قانون کے مطابق جج صاحبان خود جے آئی ٹی ارکان کے نام تجویز کر سکتے تھے۔

میرے خیال میں جے آئی ٹی کو نیب کی پاورز نہیں دی جا سکتیں یہ خلاف قانون بات ہے۔

قطری شہزادے کے خط کے بارے میں جج صاحبان کہہ چکے ہیں کہ میں نے سنا پر مشتمل ہے۔

نعمان شعیب دوست خرم بٹ ملزم لندن دہشت گردی نے کہا کہ

میں نے ووٹ ڈالنے کا کہا تو خرم بٹ نے مجھے کہا کہ ووٹ ڈالنا ناجائز اور حرام ہے۔

خرم بٹ نے نوجوانوں کو ورغلانے کے لئیے میٹ می اور اینٹی چیٹ کے نام سے دو ویب سائٹس بنا رکھی تھیں۔

خرم بٹ پاکستان میں یونیورسٹی کے طلبا کو اپنے ساتھ مل جانے کی ترغیب دیتا تھا۔

برطانیہ کی پاکستانی کمیونٹی داعش اور دہشت گردی کے خلاف ہے۔

http://naeemmalik.wordpress.com/

Advertisements

About NadeemMalikLive

NADEEM MALIK LIVE IS A FLAGSHIP CURRENT AFFAIRS PROGRAMME OF SAMAA.TV

Comments are closed.

%d bloggers like this: