RSS Feed

Author Archives: NadeemMalikLive

13 November, 2018 15:58

Posted on

NADEEM MALIK LIVE

www.humnews.pk.com

13-11-2018

پی ٹٰی آئی کی حکومت سے کوئی کام نہیں ہو رہا انہوں نے تین ماہ میں ملک کو وہ نقصان پہنچایا جو کسی حکومت نہیں پہنچایا۔ اسحق ڈار کی ندیم ملک لائیو میں گفتگو

جب مجھے ملک میں انصاف کی توقع ہو گی تو میں علاج ادھورا چھوڑ کر واپس آ جاؤں گا۔

شہزاد اکبر کو شرم آنی چاہئیے ان کو کسی بات کا علم نہیں ہے۔

مجھ پر الزام لگانا کہ میری وجہ سے سویزرلینڈ سے ٹریٹی نہ ہو سکی غلط ہے ان کو علم ہی نہیں ہے۔

میں نے اسمبلی میں یہ کہا تھا کہ کسی نے کہا ہے کہ پاکستانیوں کا ملک سے باہر دو سو ارب ڈالر پڑا ہے۔

اگر حکومت کو ملک سے باہر پانچ ہزار اکاؤنٹس کی معلومات ملی ہیں تو اس کا کریڈٹ مسلم لیگ ن کو جاتا ہے۔

نیب میری خلاف کیس چلائے یا اس کا باپ مجھے پرواہ نہیں ہے۔

سب کا احتساب ہونا چاہئیے لیکن میڈیا اور عدلیہ زبردستی نہ کرے۔

ملک کے سینئیر اینکرز کو فارغ کیا جا رہا ہے سب کو پتہ ہے ان کو کس نے فارغ کروایا ہے۔

مجھے ڈان لیکس میں دو پارٹیوں کی صلح کروانے کی سزا دی جا رہی ہے۔

بہتر ہوتا ہے کہ آئی ایم ایف کی بجائے مارکیٹ سے دوسرے لوگوں سے قرضہ لینا چاہئیے۔

میں سمجھتا ہوں کہ حکومت کو آئی ایم ایف کے پاس نہیں جانا چاہئیے تھا۔

پی ٹی آئی کے علی زیدی نے کہا کہ

تمام اداروں کو اپنا کام آزادی کے ساتھ کرنا چاہئیے۔

ہم نے کسی کے خلاف کوئی کیس نہیں بنایا سب کیس مسلم لیگ ن کی حکومت نے بنائے۔

نواز شریف کے خلاف پاناما کا کیس خود مسلم لیگ ن کی حکومت میں بنا۔

میں نے اپنے اثاثوں کی تفصیل خود نیب کو حوالے کی ہے آئیندہ سال بھی کروں گا۔

میرے پاس دبئی کا اقامہ ہے میں نے وہ ڈیکلیر کیا ہوا ہے حلف لینے سے ایک دن پہلے میں نے استعفی دے دیا تھا۔

اسحق ڈار کے آئی ایم ایف کو غلط اعداد و شمار دینے کی وجہ سے پاکستان کو سو ملین ڈالر جرمانہ ہوا تھا۔

جہانگیر ترین کو سزا ہوئی تو ہم نے شور نہیں کیا۔

ہم نے ناجائز تجاوزات کے خلاف ایکشن لیا ہے اور سب کے خلاف لیں گے۔

اگر میرے باپ نے بھی غلط کام کیا ہو تو ان کو بھی پکڑا جائے۔

پیپلز پارٹی کی پلوشہ خان نے کہا کہ

اداروں نے فیصلہ کرنا ہے ہم نے ٹی وی پروگرام میں بیٹھ کر نہیں کرنا۔

مسلم لیگ ن نے سیف الرحمان والا احتساب شروع کیا بعد میں خود ہی اس کے شکنجے میں آ گئے۔

ہر وہ شخص جس کی باہر جائیداد ہے وہ چور نہیں ہے۔

لوگوں کا میڈیا ٹرائیل ہوتا ہے جو شروع کرتا ہے یہ آخر کار اسی کی طرف جاتا ہے۔

الزامات لگانے کی بجائے ثبوت ہیں تو ہاتھ ڈالیں ماضی میں بھی ایسا ہوتا رہا ہے۔

اگر آصف زرداری پر کیس چلا کر ان پر دباؤ ڈال کر ان سے کچھ منوانا ہے تو اس طرح وہ کچھ نہیں مانیں گے۔

http://nadeemmalik.wordpress.com/

Advertisements

13 November, 2018 06:00

Posted on

image.png

https://www.youtube.com/watch?v=0wsE5WLda64

NADEEM MALIK LIVE

WWW.HUMNEWS.pk.COM

12-11-2018

TOPIC- PAKISTAN POLITICS

GUESTS- SHEHZAD AKBAR, NAYYAR BUKHARI, HAMMAD AZHAR, SHEIKH ROHAIL ASGHAR

SHEHZAD AKBAR ADVISOR TO PM said that so far the government has dug the properties of Pakistanis in other countries is worth seven hundred billion rupees. He said that the government believes that it is the ill gotten money. He said that the negotiations with UAE government about the properties are underway and will be completed soon. He said that the information from other countries is gathered on agency to agency bases. He said that the negotiations with Britain on money laundering have made vital progress. He said that the NAB that is called black law in Pakistan is the same as Britain. He said that the government is only pursuing big properties as yet and the number is in dozens. He said that JIT has investigated five thousand cases so far. He said that the money is taken overseas through the launches and then fake accounts are opened. He said that the government has detected one billion dollars tainted money in the foreign banks.

He said that a treaty would have been signed with Switzerland but it delayed for six years because of Ishaq Dar. He said that the treaty with Switzerland will be signed by the end of this year. He said that the aqama is taken to keep then money outside the country. He said that the current leadership is honest and has the political will to eradicate the corruption from the country. He said that both China and Britain are optimistic that first time there is a government in Pakistan that is serious against corruption. He said that all the money sitting in the foreign banks will be brought back to Pakistan.

NAYYAR BUKHARI OF PPPP said that Zardari was accused in the past too but outcome was nothing. He said that Shehzad Akbar has to prove his allegations in the court. He said questioned that why only politicians are accused for corruption.

He said that one of the advisors of the PM has dual nationality and case is underway in the court against him.

HAMMAD AZHAR OF PTI said that the government has obtained the data of bank accounts of Pakistanis from twenty seven countries. He said that the number of accounts will go up to one hundred and fifty thousand. He said that the money sitting in the foreign banks is worth of billions of dollars. He said that if the information about the account of Aleema Khan will come forward the action will be taken. He said that the previous government did not take any action against the money sitting in the foreign banks pretending time bar. He said that there is no time bar and now action will be taken by the government. He said that the action will be taken across the board regardless of political affiliation. He said that FBR is taking action against all four hundred and forty four accused and six billion rupees has been recovered as well. He said that if any of PTI members will be charged of corruption the party will not back him.

SHEIKH ROHAIL ASGHAR OF PML-N said that the people that are accusing us their own off shore companies will be revealed. He said that the people are defamed first complete the investigations and then name someone. He said that everybody knows that which military officer owns the form house in Australia. He said that there is the property of the sister of the PM in Dubai.

He said that the government should take action against all four hundred and fifty accused in Panama case.

http://nadeemmalik.wordpress.com/

12 November, 2018 16:03

Posted on

NADEEM MALIK LIVE

www.humnews.pk.com

12-11-2018

ہم نے اب تک جو ملک سے باہر جائیدادوں کا سراغ لگایا ہے ان کی مالیت سات سو ارب روپے ہے۔ شہزاد اکبر کی ندیم ملک لائیو میں گفتگو

ہم سمجھتے ہیں کہ یہ پیسہ کرپشن کا ہے۔

یو اے ای میں جو جائیدادیں ہیں ہم ان کے متعلق ان کے ساتھ بات کر رہے ہیں جلد مکمل ہو جائے گی۔

ہم نے ایجنسی ٹو ایجنسی کی بنیاد پر بیرون ملک جائیدادوں کی معلومات اکٹھی کی ہیں۔

ہماری برطانیہ کے ساتھ منی لانڈرنگ کے پیسے پر تحقیقات پر بہت زیادہ پیش رفت ہو چکی ہے۔

نیب کا قانون جسے کالا قانون کہا جا رہا ہے بالکل ویسا ہی ہے جیسا برطانیہ میں رائج ہے۔

ابھی ہم نے صرف بڑی پراپرٹی پر ہاتھ ڈالا ہے ان کی تعداد درجنوں میں ہے۔

جے آئی ٹی نے اب جن اکاؤنٹس کی تحقیقات کی ہیں ان کی تعداد پانچ ہزار ہے۔

لانچوں کے زیعے پیسہ باہر لے جایا جاتا ہے اور پھر جعلی اکاؤنٹس کھولے جاتے ہیں۔

اب تک جس پیسے کا پتہ لگایا گیا ہے ایک ارب ڈالر کے قریب ہے۔

سوئٹزرلینڈ کے ساتھ اسحق ڈار کی وجہ سے ٹریٹی سائن ہونے میں چھ سال کی دیر ہوئی ہے۔

اس سال کے آخر تک امید ہے کہ سوئٹزر لینڈ کے ساتھ ٹریٹی سائن ہو جائے گی۔

ملک سے باہر پیسہ رکھنے کے لئیے اقامے لئیے گئے۔

موجودہ حکومت ایماندار بھی ہے اور اس کے پاس سیاسی طور پر مصم ارادہ بھی ہے۔

برطانیہ اور چین کو پہلی دفعہ امید ہے کہ پاکستان کی موجودہ حکومت منی لانڈرنگ کے بارے میں سیریس ہے۔

جتنی رقم بھی ملک سے باہر پڑی ہوئی ہے انشا اللہ ساری واپس لے کر آیں گے۔

پیپلز پارٹی کے نیر بخاری نے کہا کہ

زرداری صاحب پر پہلے بھی الزامات لگتے رہے ہیں لیکن کوئی نتیجہ نہیں نکلا تھا۔

شہزاد اکبر جو الزامات لگا رہے ہیں انہیں ان کو عدالت میں ثابت کرنا پڑے گا۔

کرپشن کے الزامات صرف سیاست دانوں پر ہی کیوں لگائے جاتے ہیں۔

وزیراعظم کے ایک ایڈوائزر کی دہری شہریت ہے اور ان کے خلاف کیس عدالت میں چل رہا ہے۔

پی ٹی آئی کے حماد اظہر نے کہا کہ

ہم نے ستائیس ممالک سے چھیانوے ہزار پاکستانیوں کے اکاؤنٹس کا ڈیٹا مل چکا ہے۔

ہم سمجھتے ہیں کہ ڈیٹا دیڑھ لاکھ تک چلا جائے گا۔

بیرون ملک اکاؤنٹس میں موجود رقم اربوں ڈالرز میں ہیں۔

علیمہ خان کی ملک سے باہر جائیداد ہے تو ان کو بھی نوٹس جائے گا۔

پچھلی حکومت نے پاناما اکاؤنٹس میں شامل لوگوں کے خلاف کاروائی نہیں کی تھی کہ وقت گزر چکا ہے لیکن یہ بات درست نہیں ہے۔

حکومت سب لوگوں کے خلاف چاہے ان کا تعلق کسی بھی جماعت کے ساتھ ہو کاروائی کرے گی۔

ایف بی آر پاناما میں ملوث چار سو چوالیس لوگوں کے خلاف کاروائی کر رہی ہے اور چھ ارب روپیہ ریکور بھی کر لیا گیا ہے۔

جب تک میں سیٹ پر ہوں جس جس کا ڈیٹا ایف بی آر کے پاس آئے گا اس کے خلاف کاروائی ہو گی۔

پی ٹی آئی کے کسی بندے کے خلاف کیس ہو گا تو ہم اس میں رکاوٹ نہیں بنیں گے۔

مسلم لیگ ن کے شیخ روحیل اصغر نے کہا کہ

آپ دیکھئیے گا کہ جو لوگ باتیں کر رہے ہیں ان کی آف شور کمپنیاں بھی نکلیں گی۔

لوگوں کی پگڑیاں اچھالی جا رہی ہیں پہلے تحقیقات کر لیں پھر لوگوں کے نام بھی لے لیں۔

سب کو پتہ ہے آسٹریلیا میں کس فوجی افسر کا فارم ہاؤس ہے۔

وزیراعظم کی بہن کے نام پر دبئی میں پراپرٹی ہے۔

حکومت پاناما میں ملوث ساڑھے چار سو لوگوں کے خلاف کاروائی کرے۔

http://nadeemmalik.wordpress.com/

9 November, 2018 06:00

Posted on

image.png

http://www.zemtv.com/2018/11/08/nadeem-malik-live-8th-november-2018/

NADEEM MALIK LIVE

WWW.HUMNEWS.pk.COM

08-11-2018

TOPIC- PAKISTAN POLITICS

GUESTS- SALEEM SHEHZAD, MOHSIN NAWAZ RANJHA, SHAZIA MAREE, AFTAB

SALEEM SHEHZAD DG NAB LAHORE said that the case against Shahbaz Sharif has been moved forward so much that NAB arrested Ahad Cheema but now Shahbaz himself is apprehended. He said that ninety nine acres land of Paragon Housing Society was in the name of Ahad Cheema and later his sister name was also included. He said that one acre land of Ashiana Housing Society worth twenty million rupees. He said that Ahad Cheema ha mad eye opening divulgences. He said that Ahad Cheema told NAB that if you have to disclose the corruption compare the prices of energy plants in Pakistan to rest of the world. He said that Ahad Cheema told NAB the people of Pakistan are paying rupees 3.35 extra charges on electricity because of the corruption in power plants. He said that Ahad Cheema asked to become the approver but NAB was not ready for it because of the enough evidence has been gathered. He said that NAB has confiscated fifty million rupees from Fawad Hassan Fawad account of kick backs he received. He said that the money was put in the account of Fawad Hassan Fawad sister in law as well.

He said that NAB asked Shahbaz Sharif why he established so many companies; he relied because institutions do not work properly. He said that NAB asked Shahbaz Sharif why Ashiana scheme was handed over to Ahad Cheema he did not answer the question. He said that NAB told Shahbaz Sharif that Ashiana scheme was handed over to Ahad Cheema because it was one man show there. He said that according to the documents Zia is the owner of Ashiana Scheme but in reality it is someone else. He said that the actual owner has been summoned as well. He said that Saad Rafiq and his brother have gained bail from the court. He said that NAB called Salman Shahbaz to get the details of his property but it was incomplete and then he went abroad. He said that the son in law of Shahbaz Sharif has been also summoned but he went abroad too. He said that NAB has enough evidence but it takes time to prove the white collar crime. He said that case against Aleem Khan is also underway NAB told him to give the details of his overseas property but it has not been received as yet. He said that only those people are arrested that can temper the evidence. He said that the fire that catches the office plaza actually is torched to burn the documents of evidence. He said that hopefully NAB Lahore will move the case forward against Shahbaz Sharif by the end of this month to the superiors. He said that media should support NAB. He said that NAB is working hard on the cases its employees are working from morning till ten at night.

MOHSIN NAWAZ RANJHA OF PML-N said that the case against Shahbaz Sharif is subjudice but DGNAB was giving his personal opinion on it. He said that DGNAB was not supposed to give TV interview. He said that NAB could not prove its case in the past as well.

He said that the PM used tough language against the dharna but later did nothing about it.

SHAZIA MAREE OF PPPP said that NAB laws were constituted during the government of Nawaz Sharif. She said that NAB was formed for politically victimizing people. She said that Saif U Rehman called Justice Qayyum to render the punishment to Benazir Bhutto. She said that what comes around goes around what PML-N did with PPPP is happening to them now. She said that DGNAB should not have given the TV interview.

She said that the way dharna leaders threatened was very dangerous but it seems that appeasement has been done with them. She said that a PTI delegation met with PPPP and told them that writ of the government will be established.

AFTAB OF PTI said that it may be possible that influence has been used for the TV interview of DGNAB and later it will be said that the case against Shahbaz Sharif is not proved. He said that there should be open hearing of Ashiana Housing Scheme case so that there should be no doubt about it.

He said that had the government taken tough action against dharna the riots were going to spread to all the streets of the country.

http://nadeemmalik.wordpress.com/

8 November, 2018 15:59

Posted on

NADEEM MALIK LIVE

www.humnews.pk.com

08-11-2018

شہباز شریف کے خلاف کیس اس حد تک آگے جا چکا ہے کہ احد چیمہ سے شروع کیا لیکن آج وہ خود قید ہیں۔ سلیم شہزاد ڈی جی نیب لاہور کی ندیم ملک لائیو میں گفتگو

پیراگان کیس میں ننانوے کنال زمین کا کیس ہے جو احد چیمہ کے نام تھی پھر اس میں اس کی بہن کا نام بھی آ گیا۔

آشیانہ ہاؤسنگ سوسائٹی کی ایک کنال کی قیمت دو کروڑ روپے ہے۔

احد چیمہ نے ہمیں بہت خوفناک چیزیں بتائی ہیں جو ہم نے حکام بالا کو بتا دی ہیں۔

احد چیمہ نے کہا کہ اگر کرپشن پکڑنی ہے تو پاکستان میں لگنے والے اور اسی دوران دنیا میں لگنے والے انرجی پلانٹس کی لاگت نکال لیں۔

احد چیمہ وعدہ معاف گواہ بننا چاہتا تھا لیکن ہم نہیں مانے ہمارے پاس مظبوط ثبوت ہیں۔

فواد حسن فواد کے اکاؤنٹ سے ہم نے کک بیکس کے پانچ کرروڑ روپے پکڑے ہیں۔

فواد حسن فواد کی بھابھی کے اکاؤنٹ میں بھی پیسے گئے ہیں۔

آشیانہ کیس میں ہم نے پوچھا کہ اتنی کمپنیاں کیوں بنائی ہیں تو شہباز شریف بولے کہ ادارے ٹھیک کام نہیں کر رہے تھے اس لئیے بنائیں۔

ہم نے شہباز شریف سے پوچھا کہ آپ نے آشیانہ سکیم کو احد چیمہ کے حوالے کیوں کیا تو کچھ نہیں بولے۔

ہم نے شہباز شریف کو کہا کہ آپ نے یہ سکیم اس لئیے احد چیمہ کے حوالے کی کیونکہ وہاں ون مین شو تھا۔

آشیانہ کا کاغزوں میں مالک تو ضیا ہے لیکن اصل مالک کوئی اور ہے اس کو ہم نے سمن بھی کیا ہوا ہے۔

ہم نے شہباز شریف کے بیٹے سلمان شہباز کو بلا کر پوچھا کہ ان کی کتنی جائیداد ہے تو انہوں نے نا مکمل تفصیل دی پھر وہ ملک سے باہر چلے گئے۔

شہباز شریف کے داماد کو بھی ہم نے بلایا لیکن پھر وہ ملک سے باہر چلے گئے۔

ہمارے پاس کافی ثبوت ہیں لیکن وائٹ کالر کرائم پر تحقیقات کرتے بڑا وقت لگ جاتا ہے۔

علیم ٰخان کے خلاف بھی کیس چل رہا ہے ہم نے ان سے باہر کی جائیداد کی تفصیلات مانگی ہیں جو ابھی تک ہمیں نہیں ملیں۔

ہمیں روز کہا جاتا ہے کہ فلاں کو پکڑ لیا فلاں کو نہیں پکڑا ہم اس شخص کو پکڑ لیتے ہیں جو ثبوت ختم کر سکتا ہے۔

یہ جو پلازوں کو آگ لگتی ہے یہ پلازوں کونہیں بلکہ ثبوت کے کاغزات کو لگائی جاتی ہے۔

سب سے زیادہ کرپشن پاور پراجیکٹ میں ہوئی ہے اس دوران بھارت اور بنگلہ دیش میں قیمتیں بہت کم ہیں۔

احد چیمہ نے بتایا ہے کہ پاکستان میں بجلی پر فی یونٹ تین روپے پینتیس روپے زیادہ چارج کیا جا رہا ہے۔

امید ہے کہ ہم اس ماہ کے آخر تک شہباز شریف کے خلاف کیس نیب چیرمین تک پہنچا دیں گے۔

میڈیا کو ہماری مدد کرنی چاہئیے ہم بہت محنت کر رہے ہیں صبح سے رات دس بجے تک کام کر رہے ہیں۔

مسلم لیگ ن کے محسن نواز رانجھا نے کہا کہ

ڈی جی نیب لاہور کس طرح شہباز شریف کے خلاف کیس پر اپنی رائے دی ہے جبکہ کیس عدالت میں چل رہا ہے۔

پہلے بھی نیب اپنا کیس ثابت نہیں کر سکا تھا ڈی جی نیب انٹرویو نہیں دی سکتا تھا۔

وزیراعظم نے اپنی تقریر میں دھرنے کے بارے میں بہت سخت الفاظ استعمال کئیے تھے لیکن پھر کچھ نہیں کیا۔

پیپلز پارٹی کی شازیہ مری نے کہا کہ

نیب وہ ہے کہ جس کی قانون سازی نواز شریف کے دور میں ہوئی۔

نیب کو سیاسی انتقام کے لئیے بنایا گیا سیف الرحمان نے نیب کے جسٹس قیوم کو کہا کہ اتنی سزا دے دیں۔

جو کچھ مسلم لیگ ن نے پیپلز پارٹی کے خلاف کیا آج وہ اسی کے خلاف ہو رہا ہے۔

ڈی جی نیب کو اس طرح انٹرویو نہیں دینا چاہئیے تھا۔

جس طرح دھرنے والے مولویوں نے دھمکیاں دی تھیں یہ بہت خطرناک بات ہے لیکن لگتا ہے کہ ان کے ساتھ سمجھوتہ کر لیا گیا ہے۔

ہمارے پاس پی ٹی آئی کا وفد آیا تھا اور انہوں نے کہا تھا کہ وہ سٹیٹ کی رٹ قائم رکھیں گے۔

پی ٹی آئی کے آفتاب نے کہا کہ

کہیں ایسا تو نہیں کہ ڈی جی نیب کا انٹرویو اثر ڈال کر کروایا گیا ہو اور بعد میں کہا جائے کہ کیس میں سے کچھ نہیں نکلا۔

آشیانہ ہاؤسنگ سوسائٹی کے کیس کی اوپن ہیرنگ ہونی چاہئیے تا کہ کسی کو کوئی شبہ نہ رہے۔

دھرنے والوں کے خلاف سخت کاروائی کرتے تو فسادات گلی کوچوں تک پھیل جاتے۔

http://nadeemmalik.wordpress.com/

7 November, 2018 06:02

Posted on

image.png

https://www.youtube.com/watch?v=LCVgyJ6CsXw

http://www.zemtv.com/2018/11/06/nadeem-malik-live-6th-november-2018/

NADEEM MALIK LIVE

WWW.HUMNEWS.pk.COM

06-11-2018

TOPIC- PAKISTAN POLITICS

GUESTS- MOHAMMAD SHOAIB, MALAIKA BUKHARI, AWAIS LAGHARI, MURTAZA WAHAB

MOHAMMAD SHOIAB DIRECTOR FIA said that many banks data has been hacked and money from many account holders has been withdrawn. He said that banks and FIA are investigating that how the data was hacked. He said that the number of accounts hacked are in thousands. He said that if someone calls you never give him the details of your account. He said that if money from someone account has been withdrawn he should inform the bank right away.

MALAIKA BUKHARI OF PTI said that FIA can investigate the hacking of the data it is the crime. She said that we need to constitute the policy against cyber crimes. She said that instead of the accusing each other in the parliament the politicians should work for the people. She said that Khursheed Shah always talks on the personal matters in the parliament. She said that mostly PML-N and PPPP ruled on Pakistan why they did not reform the NAB law. She said that NAB is an independent institution the government does not interfere in their matters. She said that a meeting was held today about NAB but only was observed that what has been done and what is need to be done. She said that no one should be victimized but the people plundered the money of the people of Pakistan should be hold accountable.

AWAIS LAGHARI OF PML-N said that there is law about cyber crime in Pakistan it needed to be implemented. He said that the banks need to take measures to strengthen their security with the consultation of state bank. He said that state bank is very weak about the cyber crimes in Pakistan.

He said that first he was elected the member of the parliament in 1997 and he heard about the accountability but it is not done as yet. He said that the government needs to improve its expertise to prove the cyber crimes. He said that NAB should arrest someone after getting the evidence against him.

MURTAZA WAHAB OF PPPP said that few people in Pakistan make their payments through internet and still the data is hacked it is worrisome. He said that only state bank can plug the loop holes in the banking system.

He said that Zardari spent twelve years in jail in the charge of the corruption and he went straight to the court after he his turn was over as the president of Pakistan. He said that PPPP is accused of having Muk Muka with PML-N but all the cases against his party leadership were registered during their government. He said that the inquiries are underway against Zardari, Faryal Talpur and Shahbaz Sharif so nobody should be arrested before its completion.

He said that NAB chairman is answerable but its process is very difficult. He said that accountability must be done but the court should deliver its verdict on the basis of the evidence. He said that if a person wrongly accuses someone he should be punished as well.

http://nadeemmalik.wordpress.com/

6 November, 2018 15:59

Posted on

NADEEM MALIK LIVE

www.humnews.pk.com

06-11-2018

پاکستان کے بہت سے بنکوں کا ڈیٹا ہیک ہوا ہے بہت سے لوگوں کے اکاؤنٹس سے پیسے بھی نکلے ہیں۔ ڈائریکٹر ایف آئی اے محمد شعیب کی ندیم ملک لائیو میں گفتگو

ڈیٹا کس طرح ہیک ہوا ہے بنک اور ہم دونوں اس کی تحقیقات کر رہے ہیں۔

جو اکاؤنٹس ہیک ہوئے ہیں ان کی تعداد ہزاروں میں ہے۔

اگر کوئی کال کرے تو اس کو اپنے اکاؤنٹ کی معلومات ہر گز نہ دیں۔

اگر کسی کے بنک سے پیسے نکل جایں تو فوراْ بنک کو اطلاع کرے تا کہ اس کا اکاؤنٹ روک دیا جائے۔

پی ٹی آئی کی ملائیکہ بخاری نے کہا کہ

ایف آئی اے ڈیٹا ہیک ہونے کی تحقیقات کر سکتا ہے یہ ایک جرم ہے۔

ہمیں سائبر کرائم کے خلاف قومی پالیسی بنانے کی ضرورت ہے۔

ہمیں پارلیمنٹ میں ایک دوسرے پر الزام تراشی کی بجائے عوام کے مسائل حل کرنے پر زور دینا چاہئیے۔

خورشید شاہ ہمیشہ زاتی قسم کی باتیں کرتے ہیں۔

پاکستان پر سب زیادہ تر مسلم لیگ ن اور پیپلز پارٹی کی حکومتیں رہیں انہوں نے نیب کے قانون میں اصلاحات کیوں نہیں کیں۔

نیب ایک خود مختار ادارہ ہے وہ اپنا کام خود کرتا ہے حکومت کچھ نہیں کرتی۔

نیب قانون پر آج ایک میٹنگ ہوئی لیکن ابھی یہ دیکھا گیا کہ پہلے کیا ہوا اب کیا کرنا چاہئیے۔

کسی کے ساتھ زیادتی نہیں ہونی چاہئیے لیکن پاکستان کا پیسہ لوٹنے والوں کا احتساب ہونا چاہئیے۔

مسلم لیگ ن کے اویس لغاری نے کہا کہ

پاکستان میں سائبر کرائم کے خلاف قانون ہے اسے لاگو کرنے کی ضرورت ہے۔

پاکستان پے پیل کے ٹیبل پر ہی نہیں ہے لوگ اس کے زریعے اپنی ادائیگیاں کرتے ہیں۔

اسٹیٹ بنک کو ساتھ بٹھا کر بنکوں کو اپنی سکیورٹی کو مظبوط کرنا ہو گا۔

اسٹیٹ بنک سائبر کرائم کے معاملے میں بہت کمزور ہے۔

میں پہلی دفعہ انیس سو ستانوے میں پارلیمنٹ میں آیا تھا لیکن اب تک یہ ہو نہیں پایا۔

کرپشن کی باتیں ہوتی رہتی ہیں اور لوگوں کو یقین دلانے کے لئیے کوئی نہ کوئی شوشہ بھی چھوڑا جاتا ہے۔

حکومت کو وائٹ کالر کرائم کو پکڑنے کے لئیے اپنی مہارت بہتر کرنے کی ضرورت ہے۔

نیب کسی کو اس وقت پکڑے جب اس کے پاس ثبوت آ چکا ہو۔

پیپلز پارٹی کے مرتضی وہاب نے کہا کہ

پاکستان میں بہت کم لوگ انٹرنیٹ کے زریعے اپنی ادائگیاں کرتے ہیں پھر بھی ڈیٹا ہیک ہو جانا تشویش ناک ہے۔

پاکستان میں اسٹیٹ بنک ہی بنکوں کی کزوریوں کو دور کر سکتا ہے۔

زرداری نے بارہ سال کرپشن کے الزام میں جیل کاٹی اور صدارت چھوڑنے کے بعد وہ سیدھے احتساب کی عدالت میں گئے۔

ہم پر مسلم لیگ ن کے ساتھ مک مکا کا الزام لگتا ہے لیکن ہمارے خلاف تمام مقدمات ان کے دور میں بنے۔

زرداری، فریال تالپور اور شہباز شریف کے خلاف ابھی انکوائیری چل رہی ہے پھر انہیں گرفتار کیوں کیا گیا۔

نیب کے چیرمین جوابدہ ہیں لیکن اس کا طریقہ کار بہت زیادہ مشکل ہے۔

احتساب ضرور ہونا چاہئیے لیکن عدالت ثبوت کی بنیاد پر اپنا فیصلہ دے۔

جو شخص کرپشن کا غلط الزام لگائے اس کے خلاف بھی کاروائی ہونی چاہئیے۔

http://nadeemmalik.wordpress.com/